حکومت نے اگلے پندرہ دن کے لیے پیٹرول کی قیمت میں 13.55 روپے فی لیٹر اضافہ کر دیا۔

قیمتوں میں اضافہ غزہ پر اسرائیلی جنگ کی وجہ سے مشرق وسطیٰ میں جاری کشیدگی کی روشنی میں ہوا ہے۔

اس نامعلوم تصویر میں پٹرول پمپ کا کارکن گاڑی میں پٹرول ڈال رہا ہے۔ – رائٹرز/فائل
  • نگراں حکومت نے پی او ایل کی قیمتیں بڑھا دیں۔
  • پیٹرول کی قیمت 272 روپے 89 پیسے فی لیٹر ہوگئی۔
  • ہائی اسپیڈ ڈیزل کی قیمت 278.96 روپے فی لیر تک بڑھ گئی۔

اسلام آباد: سبکدوش ہونے والی نگراں حکومت نے آئل اینڈ گیس ریگولیٹری اتھارٹی (اوگرا) کی سفارش کے مطابق اگلے پندرہ دن کے لیے پیٹرول کی قیمت میں 13 روپے 55 پیسے فی لیٹر اضافہ کر دیا ہے۔

تازہ ترین قیمتوں میں اضافہ مشرق وسطیٰ میں جاری کشیدگی کی روشنی میں کیا گیا ہے کیونکہ اسرائیل غزہ پر جنگ جاری رکھے ہوئے ہے۔ اپ ڈیٹ شدہ POL قیمتیں 1 فروری سے آدھی رات سے لاگو ہوں گی۔

فنانس ڈویژن کی طرف سے جاری کردہ ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ “حکومت پاکستان نے یکم فروری 2024 سے شروع ہونے والے پندرہ دن کے دوران پیٹرولیم مصنوعات کی موجودہ قیمتوں میں تبدیلی لانے کا فیصلہ کیا ہے، جیسا کہ اوگرا نے تجویز کیا ہے،”

مصنوعاتموجودہ قیمتنئی قیمتبڑھنا گھٹنا
پیٹرول259.34 روپے272.89 روپے+13.55 روپے
ہائی سپیڈ ڈیزل (HSD)276.21 روپے278.96 روپے+2.75 روپے

نظرثانی کے بعد اب پیٹرول کی قیمت 272.89 روپے فی لیٹر ہے جبکہ ہائی اسپیڈ ڈیزل کی قیمت 2.75 روپے فی لیٹر اضافے کے بعد 278.96 روپے فی لیٹر ہے۔

مزید برآں مٹی کے تیل کی قیمت 0.24 روپے اضافے کے بعد 186.62 روپے فی لیٹر اور لائٹ اسپیڈ ڈیزل کی قیمت 2.03 روپے فی لیٹر اضافے کے بعد 166.86 روپے فی لیٹر ہو گئی ہے۔

Check Also

نگران کابینہ نے پاک ایران گیس پائپ لائن منصوبے کی منظوری دے دی۔

کل لمبائی میں سے 1150 کلو میٹر پائپ لائن ایران کے اندر اور باقی پاکستان …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *